10 ارب روپے کے ریلیف پیکج کے ساتھ چینی اور گھی کی قیمتوں میں بھی اضافہ | پاکستان

0
56


وفاقی کابینہ نے  10 ارب روپے کے ریلیف پیکج کے اعلان کے ساتھ ساتھ یوٹیلٹی اسٹورز پر چینی اور گھی کی قیمتوں میں بھی اضافہ کردیا۔

ملک بھر میں یوٹیلٹی اسٹورز پر وزیراعظم کا 7 ارب روپے کا پیکج جاری ہے اور اس کے ساتھ ساتھ اب حکومت نے 5 ماہ تک 2 ارب روپے ماہانہ اور مجموعی طور پر 10 ارب روپے کے پیکج کا اعلان کیا ہے۔ 

وفاقی کابینہ سے منظوری کے بعد یوٹیلٹی اسٹورز پر آٹا، گھی، دالیں، چینی اور چاول مارکیٹ سے 10 سے 25 فیصد کم ریٹ پر ملیں گے لیکن اب چینی اور گھی کی قیمتوں میں اضافہ کردیا گیا ہے۔

وفاقی کابینہ نے یوٹیلٹی اسٹورز پر چینی کی قیمت 68 روپے سے بڑھا کر 70 روپے فی کلو اور گھی کی قیمت 170 روپے سے بڑھا کر 175 روپے فی کلو مقرر کرنے کی منظوری دی ہے۔

قیمتوں میں اضافے کے بعد چینی کے 5 کلو کے تھیلے پر 10 روپے کا اضافہ ہوگا جبکہ آٹا، دالیں اور چاول کی قیمتیں برقرار رہیں گی۔

 ذرائع نے بتایا کہ حکومت نے 7 جنوری سے جاری 7 ارب کے پیکج میں ہی قیمتوں میں اضافہ کیا ہے اور یہ سبسڈی کم کردی گئی ہے، یہی کچھ 10 ارب کے پیکج میں بھی کیا جائے گا۔

یوٹیلٹی حکام کا کہنا ہے کہ قیمتوں میں اضافے پر کچھ کہہ نہیں سکتے اور آئندہ چند روز میں قیمتوں میں اضافے کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا جائے گا۔

خیال رہے کہ جنوری 2020 میں وزیراعظم عمران خان نے یوٹیلٹی اسٹورز کارپوریشن کے ذریعے عوام کو چینی، آٹا، گھی اور چاول پر 7 ارب روپے کا ریلیف پیکج دینے کا اعلان کیا تھا۔





Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here