کیا کملا ہیرس جو بائیڈن کی جگہ لے سکتی ہیں؟

فائل فوٹو
فائل فوٹو

امریکی صدر جو بائیڈن اگر صدارتی انتخابات سے دستبردار ہوتے ہیں تو ان کی جگہ نائب صدر کملا ہیرس لے سکتی ہیں۔

خبر رساں اداروں کے مطابق امریکی صدر جو بائیڈن کی انتخابی مہم کے سات سینئر حکام نے بتایا کہ اگر بائیڈن صدارتی انتخابات سے پیچھے ہٹتے ہیں تو نائب صدر کملا ہیرس ان کی جگہ لینے کے لیے بہترین متبادل ہوں گی۔

خبر رساں اداروں کے مطابق کچھ بااثر ڈیموکریٹس نے جو بائیڈن کے متبادل کے طور پر کیلیفورنیا کے گورنر گیون نیوزوم، مشی گن کی گریچین وائٹمر اور پنسلوانیا کے جوش شاپیرو کے نام بھی پیش کیے ہیں۔

انتخابی مہم کے ذرائع کے مطابق دیگر نام پیش کرنے کے باوجود نائب صدر کملا ہیرس کو نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔

رپورٹس کے مطابق اگر ڈیموکریٹس کی جانب سے کملا ہیرس کو پارٹی کا صدارتی امیدوار نامزد کیا جاتا ہے تو وہ بائیڈن مہم کے ذریعے جمع کی گئی رقم بھی حاصل کرلیں گی۔

گزشتہ ہفتے ریپبلکن امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ مباحثے میں جو بائیڈن کی کارکردگی بہتر نہ ہونے پر ڈیموکریٹک پارٹی میں خدشات بڑھ گئے ہیں کہ شاید جو بائیڈن دوسری مدت کے لیے فٹ نہیں ہوں گے ،اس لیے ان سے دستبردار ہونے کا مطالبہ کیا جارہا ہے۔

Leave a Comment