بڑے زمینداروں پر انکم ٹیکس لگانا پڑے گا، یہ آئی ایم ایف کی شرط ہے، صدر زرداری

صدر آصف زرداری نے کہا ہے کہ ہمارے دوستوں کی زرعی سوچ نہیں، وہ زراعت پر انکم ٹیکس لگارہے ہیں، بڑے زمینداروں پر انکم ٹیکس لگانا پڑے گا کیونکہ یہ آئی ایم ایف کی شرط ہے۔

لاہور میں پروفیسر وارث میر میموریل سیمینار سے خطاب میں آصف علی زرداری نے کہا کہ پروفیسر وارث میر سے شہید بینظیر بھٹو مشورے لیا کرتی تھیں۔

انہوں نے کہا کہ میڈیا میں جتنی تنقید مجھ پر ہوئی ہے کسی اور پر نہیں ہوئی، میں ٹی وی نہیں دیکھتا، غیبت کو اپنے لیے ثواب کا سبب سمجھتا ہوں۔

صدر مملکت نے مزید کہا کہ میں آزادی صحافت کے ساتھ ہوں لیکن گروپ بناکر کسی مقصد کےلیے ہونے والی آزادی صحافت کے خلاف ہوں۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ دنیا کی مضبوط لابی مسلم دنیا میں تقسیم لانے کے لیے اپنی طرف سے پرسپشن بنانا چاہتی ہے، بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے کھرب پتی دوستوں نے ایک مودی میڈیا بنادیا ہے۔

آصف علی زرداری نے کہا کہ آج سوشل میڈیا کا دور ہے، ہر بات دنیا کے سامنے رکھی جاسکتی ہے لیکن سوشل میڈیا میں بھی گروپنگ نظر آتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ کچھ دوستوں کو سمجھ نہیں آتی، وہ انکم ٹیکس لگائے جا رہے ہیں، ملک بنانے میں صرف مالیات نہیں اور چیزوں کی بھی اہمیت ہوتی ہے۔

صدر مملکت نے کہا کہ ایگرو فارم اور ایگرو انڈسٹری مستقبل ہے، بڑے زمینداروں پر ٹیکس لگانا پڑے گا آئی ایم ایف کا مطالبہ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ زندگی میں ہر قسم کی آزمائش آتی ہے اور ہر آزمائش کا سامنا کرنا ہے، ایمان ہے جانا اس دن ہے جب مولا لے جائے گا۔

آصف علی زرداری نے کہا کہ آج محترمہ فاطمہ جناح کی ولادت کا دن ہے ان کا ذکر کرنا بھی ضروری ہے۔

Leave a Comment