انڈیا کی جیت پر ایمل ولی کا جے ہند کا نعرہ، سوشل میڈیا پر نئی بحث

انڈیا کی جیت پر ایمل ولی کا جے ہند کا نعرہ، سوشل میڈیا پر نئی بحث

اسلام آباد ( رانا غلام قادر ) ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ میں انڈیا کی کامیابی کی پذیرائی میں عوامی نیشنل پارٹی کے سر براہ ایمل ولی خان کی جانب سے جے ہند کے نعرہ نے سوشل میڈیا پرایک دلچسپ بحث چھیڑ دی ہے۔ 

گزشتہ روز انڈیا نے ٹی ٹونٹی فائنل میں جنوبی افریقہ کو شکست دی تو ایمل ولی خان نے اپنے ٹویٹ میں جے ہند کا نعرہ لگا کر اس کامیابی کو سر اہا۔

اس سے قبل تین دن پہلے ایک ٹویٹ میں انہوں نے اس خواہش کا اظہار کیا تھا کہ افغانستان اور انڈیا اپنے اپنے سیمی فائنل میں کا میابی حاصل کریں اور افغانستان فائنل میں کامیابی حاصل کرے۔

جے ہند کے نعرہ کے ٹویٹ پر ملاجلا رد عمل سامنے آیا۔ بعض نے ان کی تائید کی تو بہت سے لوگوں نے انہیں آڑے ہاتھوں لیا۔ عبدالقدر آفریدی نے اسے ٹویٹ آف دی ایئر قرار دیا۔خنسہ نے لعنتی کا طعنہ دیا۔فہمیدہ یوسف نے پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگایا۔ 

جلال الدین نے مشورہ دیا کہ گزارا خان جی ۔ایک انصافین نے کہا کہ آپ بھارت کو مبارکباد دے سکتے ہیں۔کوئی مضائقہ نہیں پر یہ کیا بے غیر تی ہے؟؟۔ نعمت اللہ نے کہا کہ آپ کو جے شیر رام بولنا چاہئے تھا۔ خادم حسین نے شاندار قراردیا۔ ظفر وڑائچ نے کہا کہ جناں دی کھوتی ۔ انہاں کول ان کھلوتی ۔ عبید نے کہا کہ ہر انسان شدید خوشی یا شدید غم میں اپنی اصلیت ظاہر کر دیتا ہے۔ حسیب اسلم نے پاکستان زندہ باد کہا۔ عزیز خان نے کہا کہ آپ کو یہ بات زیب نہیں دیتی کہ آپ جے ہند کا نعرہ لگائیں۔

ایک پاکستانی سیاسی جماعت کے قائد کے طور پر آپ کا جے ہند کا نعرہ لگائیں ۔آپ کا جے ہندکا نعرہ لگانا سیاسی ۔ قانونی اور اخلاقی لحاظ سے ایک قبیح اور ناقابل قبول عمل ہے۔آپ کو چاہئے کہ آپ اس پر قوم سے معافی مانگیں ۔ایک ٹویٹ میں کہا گیا کہ انڈیا میں مسلمان اس بات پر لڑتے ہیں کہ یہ نعرہ نہیں لگائیں گے ۔

Leave a Comment