افغانستان میں سرگرم عالمی این جی اوز کی نگرانی کیلئے نیا میکنزم جاری

افغانستان میں سرگرم عالمی این جی اوز کی نگرانی کیلئے نیا میکنزم جاری

اسلام آباد: (انصار عباسی)…وزارت داخلہ نے افغانستان میں امدادی سرگرمیوں میں مصروف بین الاقوامی این جی اوز (آئی این جی اوز) کیلئے نظر ثانی میکنزم جاری کیا ہے تاکہ ان کے کام، رقوم اور سامان کی منتقلی پر گہری نظر رکھی جا سکے۔ 

وزارت داخلہ کی ویب سائٹ پر جاری کردہ اس میکنزم کے تحت ایسی بین الاقوامی این جی اوز کو پابند کیا گیا ہے کہ افغان امدادی سرگرمیوں کیلئے کوئی بھی نئی تقرری یا توسیع حکومت پاکستان کی رسمی منظوری سے مشروط ہوگی۔

 میکنزم کے مطابق، بین الاقوامی این جی اوز فنڈز اور سامان (آئٹمز) کی منتقلی کیلئے صرف مجاز بینکاری اور قانونی چینلز استعمال کریں گی جبکہ یہ تنظیمیں امدادی سامان کی نقل و حمل اور کسٹم حکام کی کلیئرنس سے 48 گھنٹے قبل مناسب تصدیق کیلئے سامان کی تفصیلات ایف بی آر کو بھی فراہم کرنے کی پابند ہوں گی۔

 نئے میکنزم میں پالیسی کے مطابق اس عمل کے آڈٹ کی بات بھی شامل ہے۔ ہر رجسٹرڈ بین الاقوامی این جی او وزارت داخلہ کو واضح دائرہ کار کے ساتھ ایک درخواست جمع کرائے گی۔ 

وزارت داخلہ کی خصوصی کمیٹی 10 روز میں درخواست کی جانچ کرکے اس کی منظوری دے گی۔ 

نئے میکنزم میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان کیلئے پہلے سے منظور شدہ پراجیکٹس سے کوئی فنڈ منتقل نہیں کیا جائے گا جبکہ نئے منصوبوں اور سرگرمیوں کیلئے علیحدہ فنڈز فراہم کیے جائیں گے جبکہ ان کے کھاتے بھی الگ ہوں گے۔ رقوم اور اشیاء کی منتقلی کیلئے صرف مجاز بینکنگ اور قانونی ذرائع استعمال کیے جائیں گے۔

 انٹرنیشنل این جی اوز امدادی کھیپ کی تفصیلات ایف بی آر (کلیکٹر کسٹمز، پشاور کلکٹر کسٹمز، کوئٹہ) کو کسٹم حکام کی جانب سے مناسب تصدیق اور کلیئرنس کیلئے نقل و حمل سے 48 گھنٹے قبل فراہم کریں گی۔ افغان امدادی سرگرمیوں کیلئے کوئی بھی نئی تقرری یا توسیع نئی رسمی منظوری سے مشروط ہوگی۔

 انٹرنیشنل این جی اوز ان ارکان کی تعداد بھی بتائے گا جن کیلئے انسانی امداد کی سرگرمیوں کیلئے ویزے کی درخواست کی گئی ہے۔ نئے میکنزم کے تحت انٹرنیشنل این جی او کی رجسٹریشن کیلئے آئی این جی او کی پالیسی 2015ء کے مطابق درخواست جمع کرائی جائی گی۔ ایسی کوئی بھی تنظیم جو رجسٹریشن کرانے کیلئے آمادہ ہو اسے متعلقہ سفارتخانے سے اسناد کی تصدیق کیلئے ایک خط، اصل ملک میں رجسٹریشن کا ثبوت، فنڈنگ کے ذرائع کا خط، درخواست جمع کرانے کے 30 روز میں مکمل پتے کے ساتھ مقامی/ دفتر کے پتے کے ساتھ جمع کرانا ہوگا۔ نامزد نمائندوں اور عملے کی تفصیلات بھی پیش کرنا ہوگی۔ 

وزارت داخلہ کی خصوصی کمیٹی 3 ہفتوں میں درخواست کی جانچ پڑتال کرکے اس کی منظوری دے گی۔

Leave a Comment